The Latest

 وحدت نیوز (ملتان) مجلس وحدت مسلمین پاکستان کے سیکرٹری جنرل علامہ راجہ ناصر عباس جعفری نے کہا ہے کہ کوئی بھی معاشرہ بغیر قانون کے آگے نہیں بڑھ سکتا، معاشرے میں نظم و ضبط کے لئے قانون پر عملدرآمد ضروری ہے، سابق وزیراعظم قانون کی عملداری کے خلاف نیا کلچر بنا رہے ہیں، اس طرح عدالتی نظام آگے نہیں بڑھ سکتا، اعلٰی عدلیہ کے فیصلوں کو دل و جان سے قبول کرنا چاہیے، جو تین دفعہ وزیراعظم بنا ہو، اُسے زیب نہیں دیتا کہ وہ عدلیہ کے خلاف چڑھ دوڑے، غلط کلچر کو پروان چڑھایا جا رہا ہے، گنے کا کاشتکار رُل رہا ہے، شوگر مل کا مالک تیزی سے ترقی کر رہا ہے، مزدور کا استحصال ہو رہا ہے، پاکستان کی زراعت کو کمزور کرنا پاکستان کو کمزور کرنے کے مترادف ہے، زراعت پر توجہ دینی ہوگی، حکمران کسانوں کو تکلیف دے کر پتہ نہیں کس کے ایجنڈے پر عمل کر رہے ہیں؟ جنوبی پنجاب میں ہسپتال اور صحت کی سہولیات ناپید ہیں، لوگ پریشان حال ہیں، جنوبی پنجاب کی محرومی ختم کرنے کے لئے الگ صوبے کا قیام ضروری ہے، اس سے لوگوں کی مشکلات دور ہوں گی، اس وقت پاکستان کے استحکام کے لئے الگ صوبہ ضروری ہے، جنوبی پنجاب کے علاقے چوٹی زیریں میں سکول، ہسپتال اور پینے کا پانی نہیں ہے، ہسپتالوں کی حالت بہت خراب ہے، الگ صوبہ بننے سے حالات بہتر ہوں گے۔ ان خیالات کا اظہار اُنہوں نے ملتان میں پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ اس موقع پر مجلس وحدت مسلمین جنوبی پنجاب کے سیکرٹری علامہ اقتدار حسین نقوی، ڈپٹی سیکرٹری جنرل سلیم عباس صدیقی، مولانا ہادی حسین ہادی، ضلعی سیکرٹری جنرل سید دلاور عباس زیدی، مہر سخاوت علی اور دیگر رہنما موجود تھے۔

علامہ ناصر عباس کا مزید کہنا تھا کہ عزاداری سیدالشہداء ہمارا بنیادی حق ہے، جنوبی پنجاب کی پولیس نے شہریوں کا جینا دو بھر کر دیا ہے، رحیم یار خان میں ایک اے ایس آئی جوتوں سمیت امام بارگاہ میں داخل ہوتا ہے اور تمام لوگوں پر ایف آئی آر درج کرتا ہے، اس سے بڑا کوئی المیہ نہیں ہوسکتا، پنجاب حکومت نے ہمارے ساتھ بے بنیاد مقدمات خارج کرنے کا وعدہ کیا تھا، لیکن ایسا نہیں ہوا، پاکستان ایک ایسا اسلامی ملک ہے، جہاں چرچ اور مندر میں پروگرام کرنے کے لئے کسی قسم کی کوئی اجازت کی ضرورت نہیں، لیکن مسجد اور امام بارگاہوں میں نواسہ رسول کا ذکر کرنا جُرم بن گیا ہے، مقامی ایس ایچ او سے لے کر آئی جی پولیس تک سب شہباز شریف کے نوکر ہیں، پاکستان کا قانون اور آئین مقدس ہے، لیکن یہ حکمران اس کی دھجیاں اُڑا رہے ہیں، تین بار وزیراعظم بننے والے کے بیٹے مفرور ہیں، اس طرح ملک نہیں چل سکتا، بھارت آئے روز ہمارے بارڈر پر حملہ آور ہے، امریکہ اور بھارت دونوں ملک کو کمزور کرنا چاہتے ہیں، اگر آئندہ الیکشن فری اینڈ فیئر ہوئے تو عوام اچھےلوگوں کو منتخب کریں گے۔

اُنہوں نے کہا کہ چور، شرابی، کرپٹ اور ڈاکو حکمرانی کے حق دار نہیں ہیں، ایم ایم اے کے حوالے سے کئے گئے سوال کے جواب میں علامہ ناصر عباس نے کہا کہ میں مذہب میں انتخابی نشان قرآن مجید کے نام پر ووٹ مانگنے کو دُرست نہیں سمجھتا، مذہب اس کی بالکل اجازت نہیں دیتا، اگر ہم بھی دوسروں کی طرح چالاکیاں شروع کر دیں تو ہمارے بھی دوسرے لوگوں کی طرح نئے نئے نام ہوں گے، ہم الیکشن میں بھرپور حصہ لیں گے، ہماری حکومتیں کشمیریوں کے ساتھ مخلص نہیں ہیں، کشمیر کمیٹی کی چیئرمین شپ رشوت کے طور پر دی جاتی ہے، حکمرانوں کے ایجنڈے میں اس کا کوئی حل نہیں ہے، عوام سے اپیل ہے کہ آئندہ الیکشن میں اچھے لوگوں کو منتخب کریں، اگر دونوں بُرے ہوں تو کم بُرے کا انتخاب کریں، ایسی حکومت ہو جو امریکہ اور بھارت کو اپنے قابو میں رکھ سکے، پاکستان کی خارجہ پالیسی مکمل طور پر ناکام ہوچکی ہے، پاکستان اُس وقت مشکل حالات سے نکلے گا جب خود مختار ہوگا، روس، ترکی، چائنا، ایران کے ساتھ بلاک تشکیل دے، ملک میں آر اوز کے الیکشن کی بجائے قوانین کے مطابق الیکشن ہو، اگر اس بار دھاندلی زدہ الیکشن ہوئے تو ملکی سلامتی کے لئے خطرہ ہوگا۔

وحدت نیوز (اسلام آباد) مجلس وحدت مسلمین پاکستان کے مرکزی ترجمان علامہ مختار امامی نے فلسطین میں یوم الارض کے موقع پر اسرائیلی جارحیت کی شدید مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ مظلوم فلسطینیوں کا خون اعلان کررہا ہے کہ غاصب صیہونی ریاست عنقریب نابود ہوجائے گی، فلسطینی عوام کی استقامت نے یہ بات ثابت کردی ہے کہ فتح ہمیشہ قدس کے وارثوں کا مقدر ہے۔ میڈیا کو جاری کردہ اپنے بیان میں علامہ مختار امامی کا کہنا تھا کہ امام خمینی نے قدس کی آزادی کی جس تحریک کا آغاز 1979ء میں کیا تھا آج وہ اپنے منطقی انجام کی جانب تیزی سے بڑھ رہی ہے، رہبر معظم سید علی خامنہ ای نے بھی فرما دیا ہے کہ اسرائیل انشاء اللہ پچیس سال بھی نہیں دیکھ پائے گا، ہم اس یقین کے ساتھ فلسطینی مزاحمت کی حمایت جاری رکھیں گے کہ امام خمینی اور امام خامنہ ای کا فرمان ہی حق ہے، انشاء اللہ غاصب صیہونی ریاست بہت جلد نابود ہوجائے گی۔

ان کا کہنا تھا کہ پاکستان کی عوام نے یمیشہ فلسطی مظلوم بھائیوں کے حق کیلئے اپنی آواز کو بلند کیا ہے اور بیت المقدس کی آزادی تک اس تحریک کی حمایت جاری رکھیں گے۔ علامہ مختار امامی نے عالمی انسانی حقوق کے اداروں پر تنقید کرتے ہوئے کہا کہ فلسطین میں عوام پر ہونیوالی اسرائیلی جارحیت پر یہ ادارے خاموش تماشائی ہیں، شام کے جعلی مظالم پر تو یہ ادارے بھرپور طریقے سے فعال تھے، لیکن فلسطین میں ہونیوالے مطالم پر ان کی زبانیں بند ہیں۔ ایم ڈبلیو ایم کے مرکزی ترجمان نے پاکستان کی عوام اور سیاسی و مذہبی جماعتوں سے اپیل کی کہ وہ مظلوم فلسطینیوں پر ہونیوالی تازہ اسرائیلی جارحیت پر اپنی آواز بلند کریں۔

وحدت نیوز (شکارپور)  مرکزی ڈپٹی سیکرٹری جنرل مجلس وحدت مسلین ناصر عباس شیرازی کی 3 روزہ مختصر دورہ پر اندرون سندھ آمد ، مدیجی ضلع شکارپور میں جشن مولود کعبہ علی ابن ابی طالب علیہ السلام کی مناسبت سے تقریب سے خطاب کیا۔انہوں نے کہاکہ ولایت علی شیعہ سنی وحدت کا مرکزی نقطہ ہے۔تمام مسالک کے لوگوں کو ہاتھوں میں ہاتھ ڈال کر تکفیری گروہوں کو ناکام بنانا ہو گا۔ہر ظالم کے ظلم کے خلاف کھڑے ہونا اور ہر مظلوم کی نصرت کے لیے میدان عمل میں نکلنا ولایت علی علیہ السلام کا بنیادی تقاضا ہے اور یہی مجلس وحدت مسلمین کی سیاست کا بنیادی منشور ہے ۔ظلم اور استحصال کی ہر قسم کے خلاف عوام کو شعور کے ساتھ اجتماعی میدان میں جدوجہد کے لیے آمادہ کرنا ہمارا سیاسی اسلوب ہے ۔مجلس کی قیادت اس جدوجہد میں صف اول پر کھڑی ہے اور عالمی استعمار اور وطن عزیز میں ان کے آلہ کاروں کے مقابل سیاسی جدوجہد میں پیش پیش ہے ۔ اس موقع پر شیعہ سنی عوام کی بڑی تعداد پروگرام میں شریک تھی ۔ ناصر عباس شیرازی اور مرکزی کوآرڈینیٹر شعبہ سیاسیات آصف رضااایڈووکیٹ کا استقبال پھولوں کے ہار پہنا کر اور گل پاشی کے ذریعہ کیا گیا ۔ان کو سندھی اجرک کا تحفہ چیرمین نجف شاہ نے پیش کیا ۔تقریب کے آخر میں نبی اکرم صلی اللہ علیہ و آلہ وسلم کی شان میں سلام پیش کیا گیا ۔مداح خوانوں نے اپنے مخصوص انداز میں ثنا خوانی کی ،دعا مولانا عبداللہ مطہری نے کرائی ۔

وحدت نیوز (ٹھل)  مجلس وحدت مسلمین سندہ کے سیکریٹری جنرل علامہ مقصودعلی ڈومکی نے ضلع نوابشاہ، نو شہروفیروز، مٹیاری، حیدر آباداور شہداد کوٹ کا تنظیمی دورہ کیا۔اس موقعہ پر مختلف مقامات پر خطاب کرتے ہوئے مجلس وحدت مسلمین سندہ کے سیکریٹری جنرل علامہ مقصودعلی ڈومکی نے کہا کہ امام علی ؑ کی حیات طیبہ میں ہمیں تمام انسانی کمالات یکجا نظر آتے ہیں، آپ ؑ ایک انسان کامل ہونے کے ناطے ہم سب کے لئے اسوہ ہیں ، آپ ؑ کی سیرت پر عمل پیرا ہوکر ہم دین و دنیا کی بھلائی اور کامیابی حاصل کر سکتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ نہج البلاغہ شخصیت علی ؑ کی بہترین عکاس ہے جو علم و عرفان کا سمندر ہے۔ ہم سیرت علوی سے دوری کے باعث آج زوال کا شکار ہیں، علوی سیرت و کردار اپنا کر ،  علم و عمل کے ذریعے ہم حقیقی شیعہ بن سکتے ہیں۔
              
انہوں نے کہا کہ فلسطینی مظاہرین پر اسرائیلی فائرنگ کے نتیجہ میں پندرہ افراد کی شہادت اور پندرہ سو فلسطینیوں کے زخمی ہونے پر انتہائی افسوس ہے، مسلم حکمرانوں کی بے حسی نے اسرائیل کو جری کردیا ہے۔ اسرائیلی مظالم پر عالمی ادارے اور عرب حکمران خاموش تماشائی ہیں جبکہ اسرائیل سے دوستی کرکے اورانڈیا سے اسرائیل تک فضائی سروس کو راستہ دے کر آل سعود نے اسلام دشمنی کا ثبوت دیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ دنیا بھر کے مسلمان جدوجہد آزادی کے سفر میں فلسطین اور کشمیر کے مظلوم عوام کا ساتھ دیں،  اسرائیل اور انڈیا کے بڑہتے ہوئے تعلقات پر ہمیں تشویش ہے۔ اسرائیل غاصب ریاست ہے جس کا عبرتناک انجام ابھی نزدیک ہے۔

وحدت نیوز (بہاولپور) مجلس وحدت مسلمین پاکستان کے مرکزی سیکرٹری جنرل علامہ راجہ ناصر عباس جعفری نے بہاولپور میں ڈسٹرکٹ بار سے خطاب کرتے ہوئے کہا ہے کہ سرائیکی خطے کی محرومی افسوسناک ہے، پنجاب اور وفاقی حکومت کی جانب سے اس خطے کو نظرانداز کرنے سے لوگ احساس کمتری کا شکار ہیں، جنوبی پنجاب سے ججز کا انتخاب نہ کیا جانا ، پبلک سروس کمیشن اور دیگر اہم اداروں میں نظرانداز کیا جانا تخت لاہور کی دشمنیوں کا منہ بولتا ثبوت ہے، اُنہوں نے کہا کہ عدلیہ کے جانب سے عوام کے حق میں اُٹھائے جانے والے اقدامات قابل تحسین ہیں، پاکستان میں عدم استحکام اور غیر یقینی صورتحال کے فروغ میں حکمرانوں نے بھی کوئی کسر نہیں چھوڑی۔ ملک و قوم کی ترقی کی بجائے ذاتی اثاثوں میں اضافے کے لیے مختلف ذرائع استعمال کئے جاتے رہے۔اختیارات کا ناجائز استعمال کر کے پنجاب سمیت ملک بھر میں سیاسی مخالفین کو انتقام کا نشانہ بناگیا جس نے معاشی بحران کو جنم دیا ۔حکمرانوں کی ناقص حکمت عملی کے باعث صاف پانی ،معیاری تعلیم ، صحت و صفائی اور روزگار جیسی بنیادی ضروریات زندگی سے پاکستان کی بیشتر آبادی محروم ہے۔جو عوام کے ساتھ بدترین زیادتی ہے۔

اُنہوں نے کہا کہ پاکستان میں چند خاندان حکمران ہیں جنہوں نے باریاں تقسیم کی ہوئی ہیں، ایک طرف حکمران کرپشن کررہے ہیں تو دوسری طرف ناکام خارجہ پالیسیوں کے ذریعہ سے ملک کی جڑیں کھوکھلی کررہے ہیں، ہم ملک میں اتحاد کے داعی ہیں، ہم اس ملک میں طبقات کو ساتھ لے کر چل رہے ہیں، آئندہ الیکشن میں کرپٹ،ڈاکو،لٹیرے اور ظالم حکمرانوں کا راستہ روکیں گے، علامہ ناصر عباس نے کہا کہ ن لیگ میں چند گھس بیٹھیے اداروں کے درمیان تصادم کی فضا پیدا کرنا چاہتے ہیں، اُنہوں نے کہا کہ پٹرول کی قیمتوں میں اضافے سے مہنگائی کا بحران جنم لے رہا ہے، دوسری جانب جنوبی پنجا ب کے کاشتکار اپنی فصلیں جلانے پر مجبور ہوچکے ہیں، ملز مالکان نے کسانوں کی مجبوری کا فائدہ اٹھا کر گنے کا ریٹ اپنی مرضی کا دیا، حکومت کسانوں کے مسائل حل کرنے میں ناکام ہوگئی ہے۔

 اُنہوں نے کہا کہ امریکہ بھارت کے ساتھ مل کر پاکستان کو اقتصادی طور پر کمزور کر رہا ہے، آئے روز امریکہ پاکستان سے ڈومور کا مطالبہ ہماری ناقص خارجہ پالیسیوں کی وجہ سے کررہا ہے، ہمیں ایسے حکمران منتخب کرنے ہوں گے جو امریکہ کی آنکھوں میں آنکھیں ڈال کر جواب دے، ان حکمرانوں نے پاکستان کی خود مختاری کو بیچ ڈالا ہے، پوری قوم کو گروی رکھ کر قرضے کمیشن میں آڑئے جارہے ہیں ، اُنہوں نے کہا کہ اس وقت ہماری فوج مختلف محاذوں پر ملکی دفاع کے لیے کوشاں ہے، بعض طاقتوں کی جانب سے امریکہ ،اسرائیل اور بھارت کے ایما پر فوج کی کردار کشی کا سلسلہ جاری ہے، ان حالات میں اداروں سے محاذ آرائی ملک کے لئے انتہائی نقصان دہ ہے ۔اُنہوں نے کہا کہ وکلابرادری کو انصاف کی راہ میں حائل مشکلات کو حل کرنے کے لئے کردار ادا کرنا ہو گا۔ اس موقع پر مجلس وحدت جنوبی پنجاب کے سیکرٹری جنرل علامہ اقتدار حسین نقوی، صوبائی ڈپٹی سیکرٹری جنرل سلیم عباس صدیقی اور ضلعی سیکرٹری جنرل سید اظہر حسین نقوی بھی موجود تھے ۔

وحدت نیوز(اسلام آباد)  مرکزی سیکرٹریٹ مجلس وحدت مسلمین پاکستان اسلام آباد میں سالانہ مرکزی کنونشن کے حوالے سے چیئرمین مرکزی کنونشن برادر نثار فیضی کی صدارت کور کمیٹی کا ایک اہم اجلاس منعقد ہو ا جس میں راولپنڈی ،اسلام آباد کی ضلعی کابینہ کے علاوہ علامہ اصغر عسکری معاون مرکزی سیکرٹری شعبہ تنظیم سازی ، علامہ علی اکبر کاظمی ضلعی سیکرٹری جنرل ضلع راولپنڈی ، علامہ محمد حسین شیرازی ضلعی سیکرٹری جنرل اسلام آباد ، علامہ علی شیر انصاری ، برادر یاور عباس وحدت یوتھ پاکستان   ، برادر ارشاد حسین بنگش ،ظہیر کربلائی  اور دیگر اجرائی مسئولین نے شرکت کی ، اجلاس میں سابقہ اجلاس کی کارکردگی کا جائزہ لیا گیا اور آئندہ بروز سوموار کو ہونے اجرائی اور کور کمیٹیوں کے اہم اجلاس کا ایجنڈا زہیر غور آیا ۔

 اجلاس سے علامہ اکبر کاظمی نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ ولادت کعبہ مین ہونے کا سبب یہی تھا کہ لوگ علی ع کے طرف آئیں اور اسلام کی اس برجستہ شخصیت امام حق امیر کائنات کو اپنے لئے میدان عمل میں کعبہ کی مانند جانیں کیونکہ حضرت رسالتمآب ﷺ نے حضرت علی ؑ  کو کعبہ کی مانند قرار دیا جس طرح کعبہ لوگوں کے پاس چل کر راہنمائی نہیں کرتا ایسے ہی لوگ حضرت علیؑ سے متوسل رہیں  اور راہنمائی حاصل کریں ۔                    
                                
اجلاس کے آخر میں برادر نثار فیضی چیئرمین مرکزی کنونشن ایم ڈبلیو ایم نے خطاب فرمایا اور مرکزی کنونشن کی تیاریوں پر اطمینان کا اظہار کیا اور تمام دوستوں سے بروز سوموار بعد از ظہر منعقد ہو نے اہم اجلاس میں شرکت کی تاکید فرمائی اور کہا کہ  اس سال مرکزی کنونشن کی ترجیحات میں تین اہم نکات  (  الیکشن ۲۰۰۱۸  )، (تنظیمی صورتحال ) ،(محرومیت کا خاتمہ) بھی شامل ہیں اجلاس کے آ خر میں ولادت باسعادت مولود کعبہ کی مناسبت سے مرکزی سیکرٹریٹ میں کیک کاٹا گیا۔

وحدت نیوز  (رحیم یارخان)  مجلس وحدت مسلمین پاکستان کے مرکزی سیکرٹری جنرل علامہ راجہ ناصر عباس جعفری نے کہا ہے کہ پاکستان میں عدم استحکام اور غیر یقینی صورتحال کے فروغ میں حکمرانوں نے بھی کوئی کسر نہیں چھوڑی، ملک و قوم کی ترقی کی بجائے ذاتی اثاثوں میں اضافے کے لئے مختلف ذرائع استعمال کئے جاتے رہے، اختیارات کا ناجائز استعمال کرکے پنجاب سمیت ملک بھر میں سیاسی مخالفین کو انتقام کا نشانہ بنایا گیا، جس نے معاشی بحران کو جنم دیا۔ حکمرانوں کی ناقص حکمت عملی کے باعث صاف پانی، معیاری تعلیم، صحت و صفائی اور روزگار جیسی بنیادی ضروریات زندگی سے پاکستان کی بیشتر آبادی محروم ہے، جو عوام کے ساتھ بدترین زیادتی ہے۔ انہوں نے کہا کہ عالمی قوتیں ایشیا کو تباہی کی طرف لے جانا چاہتی ہیں۔ ایشیا کا معاشی و اقتصادی استحکام ہی وہ واحد حل ہے، جو اس خطے کو مغربی استعمار کے نرغے سے چھڑایا جا سکتا ہے۔ ان خیالات کا اظہار اُنہوں نے رحیم یار خان میں پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔

علامہ ناصر عباس جعفری کا مزید کہنا تھا کہ عالمی طاغوت اپنے مفادات کے تحفظ کے لئے اس پورے خطے کو روبہ زوال رکھنا چاہتا ہے۔ عالمی دہشت گرد تنظیم داعش کی تشکیل بھی اسی مقصد کے لئے کی گئی، ان تمام سازشوں سے نبرد آزما ہونے کے لئے ضروری ہے کہ ایشیائی عوام کی آگہی کے سلسلے میں مختلف سطح پر فورم تشکیل دیئے جائیں، تاکہ مغربی عزائم کو ناکام بنایا جا سکے، عالمی طاقتوں کے نشانے پر نہ صرف ایشیا ہے بلکہ امت مسلمہ کی تباہی بھی ان عالمی طاقتوں کا اولین ہدف ہے، عالم اسلام کے دانشمندانہ، بابصیرت اور جرات مندانہ اقدامات اور اخوت کے ہتھیار سے مغرب کے ناپاک ارادوں کو ناکام بنایا جا سکتا ہے۔ اس موقع پر ایم ڈبلیو ایم جنوبی پنجاب کے سیکرٹری جنرل علامہ اقتدار حسین نقوی بھی ان کے ہمراہ تھے۔

وحدت نیوز (گلگت)  سید علی رضوی عز م و استقامت کے پیکر ہیں ،انہوں نے اپنی زندگی گلگت بلتستان کے عوام کے نام وقف کردی ہے۔گندم سبسڈی کی بحالی، ٹیکسوں میںچھوٹ اور خالصہ سرکار سے حکومت کا یوٹرن سید علی رضوی اور ان کے ساتھیوں کی جہد مسلسل کا نتیجہ ہے۔ مجلس وحدت مسلمین کے مرکزی رہنما علامہ نیئر عباس مصطفوی نے کہا ہے کہ مجلس وحدت مسلمین محض زبانی دعووں پر یقین نہیں رکھتی ، آغا علی رضوی نے چھومک میں 19 دن دھرنا دیکر حکومت کو اپنے موقف کو تبدیل کرنے پر مجبور کردیا۔حکومت کا لینڈ ریفارمز کمیشن کے قیام اور ناتوڑ رول کو ختم کرنے کا اعلان خوش آئند ہے ، عوامی خواہشات کے مطابق قانون سازی کی مجلس وحدت مسلمین ہرممکن تعاون کرے گی لیکن زبردستی عوام کو اپنے ملکیتی زمینوں سے بیدخل کرنے کی ہر کوشش کے آگے سیسہ پلائی دیوار بن جائیں گے۔

انہوں نے کہا کہ نومل چھلمس داس میں سرکاری اداروں کے نام الاٹمنٹ کے فیصلے کو مسترد کرتے ہیں۔جن اداروں اور محکموں کے نام عوامی زمین کی بندربانٹ کی گئی ہے انہیں فوراً کینسل کیا جائے اور تعمیراتی کام کو بند کروایا جائے۔انہوں نے کہا کہ ماضی میں جن حکمرانوں نے عوامی ملکیتی زمین کی بندر بانٹ کی تھی عوام نے انہیں اقتدار سے باہر کردیا اور موجودہ حکومت کو مینڈیٹ ماضی کی حکومت کی عوام دشمن فیصلوں کے نتیجے میں ملا ہے۔موجودہ حکومت عوامی مسائل کے حل کیلئے سنجیدہ اقدامات کرے اور عوام کو سڑکوں پر لاکر ایشوز ایڈریس کرنے کا موقع فراہم نہ کرے۔

انہوں نے کہا ہے حکومت اقتدار میں دوام چاہتی ہے تو عدل و انصاف کے تقاضے پورے کرے،گلگت بلتستان میں رہنے والے تمام مسالک کے عوام کو ایک ہی نظر سے دیکھیں ۔شیعہ نشین علاقوں سے متصل زمینوں پر حکومت جبری قبضے کرکے ناتوڑ رول کا بے دریغ استعمال کیا جارہا ہے جبکہ دیگر علاقوں میں ناتوڑ رول نافذالعمل ہی نہیں،اگر حکومت کے دعووں میں سچائی ہے تو ہر جگہ ایک ہی قانون ہونا چاہئے۔مختلف علاقوں میں مختلف قوانین کا اطلاق حکومت کے دوغلے پن کا ظاہر کرتی ہے۔

وحدت نیوز (لاہور) مجلس وحدت مسلمین کے صوبائی سیکرٹری جنرل پنجاب علامہ مبارک علی موسوی نے مولائے متقیان حضرت علی ابن ابی طالب علیہ السلام کی ولادت باسعادت کی مبارک باد پیش کی اور آپ کے فضائل و مناقب پر روشنی ڈالتے ہوئے کہا کہ امامت منصب الہی ہے اور اس کا تعین خدا کی جانب سے کیا جاتا ہے اور خداوند تعالی ایسے شخص کو اس منصب کے لئے منتخب کرتا ہے جو لوگوں کی زیادہ سے زیادہ ضرورتوں کو پورا کر سکے جس میں علم و دانش سر فہرست ہیں۔

انہوں نے کہا کہ امیرالمومنین حضرت علی علیہ السلام کے فضائل و کمالات کے بیان سے زبان عاجز ہے البتہ ہمیں دیکھنا چاہیے کہ ہم حضرت علی السلام کے سچے پیروکار ہیں یا نہیں۔انہوں نے کہا کہ ہمیں حضرت علی علیہ السلام کے علم و کمالات کی روشنی میں مختلف شعبوں میں تحقیق کر کے دنیاوی میدانوں کو تسخیر کرنا چاہیے۔ امام علی علیہ السلام کی سیرت طیبہ کو اپنے لیے نمونہ بنانا چاہیے تاکہ دشمن کی سازشوں کو ناکام بنایا جاسکے۔ ان کا مزید کہنا تھا کہ ملت تشیع ولایت کے پرچم تلے متحد ہے ، دشمن لاکھ کوشش کرےلےہمارے درمیان نفاق پھیلانے میں ناکام رہے گا۔ علامہ سید مبارک علی موسوی کا کہنا تھا کہ آج کا دن خوشی اور جشن کا دن ہے جسے بغیر کسی تعصب کے بھرپور طریقے سے منایا جانا چاہیے۔

وحدت نیوز (کراچی)  مجلس وحدت مسلمین کراچی کے رہنما احسن عباس رضوی نے صوبے کے مختلف حصوں میں بجلی کی طویل دورانیے کی غیر اعلانیہ لوڈشیڈنگ پر شدید ردعمل کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ حکومت سندھ عوام کو سہولیات کی فراہمی کی بجائے آئے دن ان کی مشکلات میں اضافے کا باعث بن رہی ہے۔کراچی میں گرمی کے آغاز کے ساتھ ہی بارہ بارہ گھنٹے بجلی کی بندش حکومت کی ’’مثالی کارکردگی‘‘پر سوالیہ نشان ہے۔کے الیکٹرک کے بے لگام افسران کسی حکومتی شخصیت کے احکامات کو خاطر میں نہیں لاتے۔صوبے میں میٹرک کے امتحانات کا آغاز ہو چکا ہے اور کے الیکٹرک کی ’’مہربانیاں‘‘ طلبا ءکی تیاری کے دوران ان کے لیے درد سر بنی ہوئی ہیں ، ناعاقبت اندیش حکمرانوں اور کے الیکٹرک انتظامیہ نے گذشتہ سالوں میں ہیٹ اسٹروک اور لوڈشیڈنگ میں قیمتی انسانی جانوں کے ضیاع سے سبق نہیں سیکھا.

انہوں نے مزید کہاکہ عوام کو صاف پانی،بجلی،گیس ،صحت و صفائی اور تعلیم جیسی بنیادی سہولیات کی فراہمی ہمیشہ حکومتی ترجیحات گنی جاتی رہی ہیں لیکن ہر دورمیں بے حس حکمرانوں نے ان ترجیحات کو اخباری دعووں تک ہی محدود رکھا ۔عوام کی جماعت ہونے کی دعویدار پیپلز پارٹی کی حکومت کی طرف سے عوام کے لیے کھڑی کی جانے والی مشکلات آئندہ الیکشن میں جماعت کی مقبولیت کے لیے سخت نقصان دہ ثابت ہوں گی۔انہوں نے کہا کہ حکومت لوڈشیڈنگ پر قابو پانے کے لیے ترجیحی بنیادوں پر اقدامات کرے۔سندھ بھر بلخصوص شہر قائد میں جاری بجلی کے مصنوعی بحران کا جلد خاتمہ نا ہونے کی صورت میں پہلے مرحلے میں آگہی و تشہیری مہم اور دوسرے مرحلے میں احتجاجی مہم کا آغاز کریں گے،انہوں نے وفاقی وزیر بجلی و پانی اور چیف جسٹس سے کراچی میں اس غیر اعلانیہ لوڈشیڈنگ کانوٹس لینے کا بھی مطالبہ کیا ہے۔

Page 9 of 842

مجلس وحدت مسلمین پاکستان

مجلس وحدت مسلمین پاکستان ایک سیاسی و مذہبی جماعت ہے جسکا اولین مقصد دین کا احیاء اور مملکت خدادادِ پاکستان کی سالمیت اور استحکام کے لیے عملی کوشش کرنا ہے، اسلامی حکومت کے قیام کے لیے عملی جدوجہد، مختلف ادیان، مذاہب و مسالک کے مابین روابط اور ہم آہنگی کا فروغ، تعلیمات ِقرآن اور محمد وآل محمدعلیہم السلام کی روشنی میں امام حسین علیہ السلام کے ذکر و افکارکا فروغ اوراس کاتحفظ اورامر با لمعروف اور نہی عن المنکرکا احیاء ہمارا نصب العین ہے 


MWM Pakistan Flag

We use cookies to improve our website. Cookies used for the essential operation of this site have already been set. For more information visit our Cookie policy. I accept cookies from this site. Agree